99

سموگ کے خاتمے کے لیے مصنوعی بارشیں

تحریر شئیر کریں

سموگ کے خاتمے کے لیے مصنوعی بارشیں

اہور: سموگ کی حالیہ صورتحال کو مدنظر رکھتے ہوئے، حکومت نے ہفتے کے روز پنجاب کے 10 اضلاع کے مختلف علاقوں میں سمارٹ لاک ڈاؤن نافذ کیا تھا۔ تفصیلات کے مطابق حکام نے پنجاب کے 10 اضلاع میں معمولات زندگی کو محدود کرنے کا فیصلہ کیا جن میں لاہور، گوجرانوالہ، ننکانہ صاحب، شیخوپورہ، قصور، گجرات، سیالکوٹ، نارووال، حافظ آباد اور منڈی بہاؤالدین شامل ہیں۔ حکام نے ہدایت کی کہ آج تمام سرکاری اور نجی تعلیمی ادارے بند رہیں گے، اس دوران آن لائن کلاسز کا انعقاد کیا جا سکے گا، تاہم بازار، دکانیں، سینما اور ریستوران دوپہر 3 بجے تک بند رہیں گے۔ پڑھیں: تاجروں، ریسٹورنٹ مالکان نے سموگ لاک ڈاؤن کو مسترد کر دیا۔ محکمہ ماحولیات نے شہریوں کو سموگ سے خبردار کیا کیونکہ شہر کا مجموعی ایئر کوالٹی انڈیکس (AQI) 394 ریکارڈ کیا گیا جس کے بعد لاہور دنیا کا آلودہ ترین شہر بن گیا۔ ماہرین نے سموگ سے نمٹنے کے لیے شہریوں کو چہرے کے ماسک پہننے اور ضروری احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کا مشورہ دیا۔ پنجاب حکومت کے حکام نے شہریوں اور صنعت کاروں سے کہا کہ وہ اس آفت سے نمٹنے کے لیے حکام کے ساتھ تعاون کریں۔
لاک ڈاون سے کوئی فائدہ نا ہو اتو اب ماہرین مصنوعی بارشوں کا منصوبہ بنا رہے ہیں۔

سموگ کے خاتمے کے لیے مصنوعی بارشیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں